ہندوستان، گائے ذبح کرنے کے دعوے کے ساتھ مسلمان سنگسار

پولیس اہلکاروں کے برتاؤ اور متاثرہ شخص کو زمین پر گھسیٹنے پر معافی مانگی گئی ہے

ہندوستان، گائے ذبح کرنے کے دعوے کے ساتھ مسلمان سنگسار

ہندوستانی پولیس   نے گائے ذبح کرنے کے دعوے کے ساتھ سنگسار کیے جانے والے ایک شخص کو بچانے کے دوران  پولیس اہلکاروں کے برتاؤ اور متاثرہ شخص کو زمین پر گھسیٹنے پر معافی مانگی ہے۔

صوبہ اتر پردیش کے محکمہ پولیس کی جانب سے جاری کردہ اعلامیہ میں  بتایا گیا ہے کہ اس غیر انسانی فعل میں ملوث افراد کے خلاف قانونی کاروائی شروع کر دی گئی ہے۔

اعلامیہ  میں پولیس کو اپنے برتاؤ میں بڑی توجہ اور حساسیت سے کام  لیے جانے کی ضرورت  پر زور دیا گیا  ہے اور کہا گیا ہے کہ عوام میں امن و امان کے قیام   کے لیے انسانی خدشات کو نظر ِ انداز کیا گیا۔

یاد رہے کہ اتر پردیش  کے علاقے ہاپور میں گائے ذبح کرنے کے دعوے کے ساتھ ایک ہندو گروہ نے  دو شخصوں  پر تشدد کیا تھا جن میں سے ایک اسپتال میں جان بحق ہو گیا تھا۔

اس ملک میں  جانوروں کو ذبح کرنے اور ان کا گوشت خورد کرنے کے جواز میں خاصکر مسلمان اقلیت  کے خلاف بھاری تعداد میں نفرت آمیز کاروائیاں  کی جا رہی ہیں۔



متعللقہ خبریں